URDU NEWS

پاکستان میں ترسیلات زر،نان ٹیکس آمدنی، غیرملکی سرمایہ میں کمی ریکارڈ

وزارت خزانہ کی جانب سے ملکی معیشت پر ماہانہ اپ ڈیٹ آؤٹ لک رپورٹ جاری

ترسیلات زر2.1فیصد کمی سے2.7ارب ڈالرریکارڈکی گئیں، ملکی برآمدات19.7 فیصد اضافے سے 2.3 ارب ڈالر کی سطح پر رہیں
درآمدات 51.7 فیصد اضافے سے 5.4ارب ڈالر،فولیو سرمایہ کاری مثبت رجحان کے ساتھ 1.02ارب ڈالرتک پہنچ گئی
وزارت خزانہ کی جانب سے ملکی معیشت پر ماہانہ اپ ڈیٹ آؤٹ لک رپورٹ جاری کردی گئی جس میں کہا گیا کہ ترسیلات زر،نان ٹیکس آمدنی اور غیرملکی سرمایہ میں کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ برآمدات سمیت درآمدات،ایف بی آرمحصولات،بڑی صنعتوں کی پیداوار میں اضافہ ہوا۔رپورٹ میں کہا گیا کہ جولائی میں ترسیلات زر2.1فیصد کمی سے2.7ارب ڈالرریکارڈکی گئیں جبکہ ملکی برآمدات19.7 فیصد اضافے سے 2.3 ارب ڈالر کی سطح اور ملکی درآمدات 51.7 فیصد اضافے سے 5.4ارب ڈالر کی سطح تک پہنچ گئیں۔کرنٹ اکاؤنٹ خسارے 0.8ارب ڈالراضافے سے جی ڈی پی کا 2.8 فیصد ریکارڈ کیا گیا جبکہ براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری 30.1 فیصد کمی سے89.9ملین ڈالر رہی۔رپورٹ کے مطابق فولیو سرمایہ کاری مثبت رجحان کے ساتھ 1.02ارب ڈالرتک پہنچ گئی جبکہ زرمبادلہ ذخائراگست کے آخری ہفتے تک27ارب31کروڑڈالرہوگئے اور اسٹیٹ بینک20.26 ارب ڈالر، کمرشل بینکوں کے ذخائر 7.04ارب ڈالر رہے۔وزارت خزانہ نے بتایا ہے کہ ترسیلات زر،نان ٹیکس آمدنی اور غیرملکی سرمایہ میں کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ برآمدات اور برآمدات سمیت بڑی صنعتوں کی پیداوار میں اضافہ ہوا۔ ڈالر کی شرح تبادلہ165.21روپے فی ڈالرکی سطح پرپہنچ گئی اور جولائی میں ٹیکس ریونیو42.5فیصداضافے سے414ارب روپے رہا جبکہ گزشتہ سال نان ٹیکس آمدنی12.3فیصدکمی سے 1631ارب رہی۔
رپورٹ میں کہا گیا کہ جولائی کے دوران پی ایس ڈی پی کی مد میں 133.7ارب روپے منظور کئے گئے، گزشتہ سال مالیاتی خسارہ بڑھ کر3403ارب روپے کی سطح تک پہنچ گیا، زرعی قرضے 12.4فیصد اضافے سے1366ارب روپے کی سطح پررہے۔مہنگائی کے حوالے سے وزارت خزانہ نے کہا جولائی میں مہنگائی کی ماہانہ شرح8.4فیصد اور جولائی مہنگائی کی سالانہ شرح 8.9فیصد ریکارڈکی گئی۔رپورٹ کے مطابق بڑی صنعتوں کی شرح نموجون میں 18.4فیصد تک اور جولائی تا جون میں 14.9فیصد تک پہنچ گئی جبکہ اسٹاک ایکسچینج انڈیکس 47 ہزار829پوائنٹس عبور کر گیا۔